crime scen smaglar 136

پشاور، تعلیمی اداروں میں آئس سمگل کرنے والا 5 رکنی گروہ سرغنہ سمیت گرفتار

پشاور، تعلیمی اداروں میں آئس سمگل کرنے والا 5 رکنی گروہ سرغنہ سمیت گرفتار

(روزنامہ خبر) ڈسٹرکٹ پولیس(District Police) مردان کی آئس کے خلاف اہم کامیاب کاروائیوں(Actions) کے دوران سٹی سرکل پولیس نے تعلیمی اداروں(Educational institutions) میں آئس سمگل کرنے والے 5 رکنی گروہ کو سرغنہ سمیت گرفتارکر لیا۔ تفصیلات(Details) کے مطابق سٹی سرکل پولیس ڈی ایس پی بشیر احمد کی قیادت(Leadership) میں ایس ایچ او سٹی مقدم خان نے منشیات(Drugs) اور آئس سمگلرز کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے بین الاضلاعی گروہ کے سرغنہ سرفراز کو 4 ساتھیوں سمیت گرفتار(Arrested) کر لیا جن میں منیب اللہ، سید سلیمان، حضر ت بلال اور محمد یعقوب شامل(involved ) ہیں، یہ منشیات سمگلر گروہ صوبہ بھر کے تعلیمی(Educational) اداروں کو منشیات سمگل کرنے میں ملوث ہے۔
ڈی پی او سجاد خان نے پریس کانفرس(Conferences) سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ خفیہ اطلاع پر گروہ کو گاڑی نمبری LHV-7489کے ذریعے آئس سمگل کرتے ہوئے عبدالولی خان یونیورسٹی(University) (مین کمپس)پارکنگ گیٹ کے سامنے گرفتار کیا گیا۔

انہوں نے بتایا کہ ملزمان(suspects) کے قبضے سے 695گرام آئس، 3کلو گرام سے زائد چرس اور ایک کلاشنکوف(Kalashnikov) برآمد کی گئی ،گرفتار ملزمان میں سے 3 ملزمان سرغنہ سرفراز، حضرت بلال اور محمد یعقوب یونیورسٹی میں ملازمین ہیں۔

گرفتار ملزمان کے خلاف مروجہ ایکٹ کے تحت مقدمات(Cases) درج کر کے مزید تفتیش جاری ہے ، ادھر تھانہ پار ہوتی پولیس(Police) نے تین مبینہ آئس فروشوں عثمان علی، عادل باچا، نور محمد ساکنان (بالا گڑھی)شہباز گڑھی کو گرفتار کر کے ان کے قبضے(Occupations) سے مجموعی طور پر 6کلوگرام سے زائد چرس اور 67گرام آئس(67 grams of ice) سمیت ایک عدد پستول برآمد کر کر لیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں