92

بھارت میں مساجد کی بے حرمتی اور مسلمانوں پر تشدد کیخلاف پنجاب اسمبلی میں مذمتی قرارداد جمع

بھارت میں مساجد کی بے حرمتی اور مسلمانوں پر تشدد کیخلاف پنجاب اسمبلی میں مذمتی قرارداد جمع

(روزنامہ خبر) بھارت میں مساجد(Mosques) کی بے حرمتی اور مسلمانوں پر تشدد(Violence) کیخلاف پنجاب اسمبلی میں مذمتی قرارداد جمع(Plural) کروادی گئی ۔مسلم لیگ (ن)کی رکن عظمی بخاری(Buhari) کی جانب سے جمع کرائی گئی قرار داد کے متن میں کہا گیا ہے کہ ایوان(House) بھارت میں انتہا پسند ہندوں کی جانب سے مساجد کی بے حرمتی(desecration) کی شدید مذمت کرتا ہے۔بھارتی دارالحکومت(Capital) نئی دہلی میں مسلمانوں پر شرپسندوں کا تشدد شرمناک ہے۔

مودی حکومت کی ایما پر بھارتی مسلمانوں(Muslims) کیخلاف کریک ڈان کیا جارہا ہے۔بھارت میں تین ماہ سے اقلتیں متنازعہ شہریت قانون(Citizenship law) کے خلاف سراپا احتجاج ہیں۔مودی حکومت نے صدارتی حکم نامے کے ذریعے میڈیا کو بھی مسلمانوں کا احتجاج(Protest) دیکھانے سے روک دیا ہے۔مودی موجودہ صدی کا سب سے بڑا ڈکٹیٹر(Dictator) بن چکا ہے۔ قرار داد میں اقوام متحدہ سے مطالبہکیا گیا کہ بھارت میں انتہا پسندوں(Likes) کے مسلمانوں پر حملے کا نوٹس لیا جائے۔اقوام متحدہ بھارت کو اقلیتوں(Minorities) کا تحفظ یقینی بنانے کی ہدایات جاری کرے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں